Mon 13-2-1443AH 20-9-2021AD

رواں سال بین الاقوامی کرکٹ ایونٹ ہوتانظرنہیں آرہا، احسان مانی

چيئرمين پی سی بی احسان مانی کا کہنا ہے کہ رواں سال ٹی 20 ورلڈ کپ ہونا ممکن نہيں لگتا، ایونٹ اگلے سال تک بڑھايا جاسکتا ہے، بڑے ٹورنامنٹ میں کوئی کھلاڑی متاثر ہوا تو مشکلات پیدا ہوجائیں گی، آئی سی سی فیصلہ تمام اسٹیک ہولڈرز کی مشاورت کے بعد کرے گا۔

چیئرمین پی سی بی احسان مانی کا ویڈیو کانفرنس میں کہنا تھا کہ لگتا نہيں اس سال ٹی 20 ورلڈ کپ ہوگا، رواں سال کے آئی سی سی ایونٹس آئندہ سال ہوتے دیکھ رہا ہوں، ورلڈ کپ ميں کوئی کھلاڑی متاثر ہوا تو مشکلات پیدا ہوجائیں گی، آئندہ 3 سے 4 ہفتوں میں اس حوالے سے فیصلہ متوقع ہے، ایونٹ نہ ہونے پر آئی سی سی کا زیادہ مالی نقصان نہیں ہوگا۔

انہوں نے مزید کہا کہ اگر دسمبر تک حالات بہتر نہ ہوئے تو ہمیں پی ایس ایل کے بقیہ میچز سے متعلق اپنا فیصلہ کرنا پڑیں گے، ڈومیسٹک کرکٹ بروقت شروع ہوجائے اس کی کوئی گارنٹی نہیں، بظاہر یہی لگتا ہے کہ ابھی حالات اور خرابی کی طرف بڑھیں گے، شاید ہمارا ڈومیسٹک کرکٹ کچھ تاخیر کا شکار ہو۔

چیئرمین پی سی بی کا کہنا ہے کہ بدقسمتی سے یہ ہمارے کنٹرول میں نہیں، ہم کسی کھلاڑی یا اسٹیک ہولڈر کی صحت پر سمجھوتہ نہیں کریں گے، بے شک آسٹریلیا اور نیوزی لینڈ کی حکومتوں نے کووڈ 19 پر کافی کنٹرول کرلیا ہے مگر وہ دونوں بورڈز اس حوالے سے بہت محتاط ہیں۔

احسان مانی نے مزید کہا کہ ایشیا کپ کا مقصد ایشیائی ممالک کیلئے پیسہ اکٹھا کرنا ہوتا ہے، ایشیا کپ نہیں ہوتا تو سب سے زیادہ نقصان نیپال، قطر اور بحرین جیسے ممالک کو ہوگا، جنوبی ایشیا میں سری لنکا کے حالات سب سے بہتر ہیں، سری لنکا پُرامید ہے کہ وہاں ستمبر تک کووڈ 19 پر قابو پالیا جائے گا، پاکستان نے سری لنکا کے ساتھ میزبانی کا تبادلہ سیاست بنیاد پر نہیں بلکہ ایشیائی کرکٹ کی بہتری کیلئے کیا۔

Read Previous

طارق عزیز کی زندگی اور کیریئر پر ایک نظر

Read Next

شوبز شخصیات کا طارق عزیز کو خراج عقیدت